تفریح

10 'باجی راؤ مستانی' کے مکالمے جو آج بھی ہمارے دلوں میں گونجتے ہیں۔

- اشتہار-

سنجے لیلا بھنسالی کی مہاکاوی تاریخی رومانوی فلم کو 6 دسمبر 18 کو سینما گھروں میں آئے 2015 سال سے زیادہ کا عرصہ گزر چکا ہے، لیکن اس تمام عرصے کے بعد بھی لوگ ابھی تک اس کے اثرات سے باہر نہیں نکل پائے ہیں۔

پیشوا باجی راؤ کا کردار ادا کرنے والے رنویر کپور کے لیے اس فلم کو ایک اہم موڑ کہا جا سکتا ہے۔ کردار کے لیے گنجے ہونے سے لے کر حامی کی طرح تلوار چلانے تک، اداکار نے اس فلم سے ناظرین کے دلوں میں ایک خاص جگہ بنائی۔

اس فلم کے لیے رنویر نے کئی ایوارڈز جیتے جن میں بہترین اداکار کا فلم فیئر ایوارڈ اور بہترین اداکار کے لیے زی سنے کریٹکس ایوارڈ شامل ہیں۔ اس فلم نے کل سات نیشنل فلم ایوارڈ جیتے ہیں۔

دیپکا پادکون باجی راؤ اول کی بیوی مستانی کے کردار کے لیے تنقیدی تعریف میں بھی کامیابی حاصل کی اور فلم کے لیے "بہترین اداکار - خاتون" کے لیے زی سنے ایوارڈ جیتا۔

کچھ جذبات سے بھرے اور کچھ آگ سے بھرے، باجی راؤ مستانی کے مشکل ڈائیلاگز کو فلم کی کامیابی کی ریڑھ کی ہڈی قرار دیا جا سکتا ہے۔ تو نیچے لکھے ہوئے 10 'باجی راؤ مستانی' کے مکالمے پڑھیں جو آج بھی ہمارے دلوں میں گونجتے ہیں۔

1. 'کسکی تلوار پہ سر رکھوں یہ بتا دو مجھے، عشق کرنا کھاتا ہے تو سجا دو مجھے' - مستانی

باجی راؤ مستانی ڈائیلاگ

2. 'باجی راؤ نی مستانی سے محبت کی ہے، آیاشی نہیں' - باجی راؤ

باجی راؤ مستانی ڈائیلاگ رنویر سنگھ

3. 'ادھوری ملت ہی تو پھر سے ملنے کا وڑا ہوتا ہے' - مستانی

'ادھوری ملت ہی تو پھر سے ملنے کا وڑا ہوتا ہے' - مستانی

4. 'لگام دکھتی نہیں ہے پر زوبان پر ہونی چاہیئے...سمجھلا' - باجی راؤ

باجی راؤ ڈائیلاگ

بھی پڑھیں: امیتابھ بچن - 5 Epoch Making Dialogues

5. 'ہر جنگ کا نیتیجا تلواروں سے نہیں ہوتا… تلوار سے جیدا دھر، چلے والے کی سوچ میں ہونا چاہیئے' - باجی راؤ

باجی راؤ مستانی فلم کے ڈائیلاگز

6. 'پتر آگر پیٹ کی پگھدی پہان لے تو عثمان پیٹ کی بدھی تو نہیں آ جاتی… چندن کے ورکش کو بھی سوگندھ دینے کے لیے ایک عمر کی آواشکت ہوتی ہے' – باجی راؤ

رنویر سنگھ باجی راؤ مستانی میں

7. 'سیدھا ہملے کرو جیسے قسمت کرتی ہے' - باجی راؤ

'سیدھا ہملا کرو جیسے قسمت کرتی ہے'

8. 'جب دیواروں سے جیدا دوری دلوں میں ہو جائے تو بات نہیں ٹکٹی' - باجی راؤ

باجی راؤ مستانی فلم

9. 'یودھا ہوں ٹھوکر پتھر سے لگے پھر بھی ہاتھ تلوار پہ ہی جاتی ہے' - مستانی

دیپیکا پڈوکون باجی راؤ مستانی نظر آئیں

10. 'چیتے کی چال، باز کی نظر اور باجی راؤ کی تلوار پر سندہ نہیں کرتے … کبھی بھی ماں دے سکتی ہے..' - باجی راؤ

ہمیں انسٹاگرام پر فالو کریں۔ (@uniquenewsonline) اور فیس بک (@uniquenewswebsite) مفت میں باقاعدہ خبروں کی اپ ڈیٹس حاصل کرنے کے لیے

متعلقہ مضامین